نوجوان کی فائرنگ،ڈاکٹرجاں بحق،3افرادشدیدزخمی

3 days ago


فائرنگ کاواقعہ ضلع ننکانہ میں احمدی عبادتگاہ کے باہرپیش آیا

ضلع ننکانہ کے علاقے مڑھ بلوچاں میں ایک نوجوان کی فائرنگ سے ایک نوجوان ڈاکٹرجاں بحق اوراس کا باب دوسرے دوبھائی سمیت شدید زخمی ہوگیا۔زخمی ہونے والوں کوتشویش ناک حالت میں ہسپتال منتقل کر دیا گیا۔ جاں بحق ہونے والے نوجوان کانام ڈاکٹرطاہراحمد بتایاجاتا ہے۔زخمی ہونے والوں میں طیب،طارق اورسعید شامل ہیں۔


فائرنگ کرنے والے ملزم کا نام ماحدبتایاجاتاہے جس کی عمر16سال ہے۔ذرائع کے مطابق ملزم نے مقتول کے خاندان کوقادیانی عبادتگاہ میں جانے سے روکاتھا۔فائرنگ کاواقعہ قادیانی عبادتگاہ کے باہر پیش آیا۔ 31 سالہ ڈاکٹر طاہرکچھ دنوں میں امریکہ جانے والاتھا۔مارنے والاکے بارے میں ایک اطلاع یہ بھی ہے کہ وہ لوہے کاکام کرتاہے اوروہ مقتول کاہمسائیہ تھاجواس واقعہ کے بعد نعرے لگاتاہواپولیس سٹیشن پہنچ گیا۔


احمدیوں پرکچھ عرصے سے اس طرح کے حملے کئے جارہے ہیں جس میں اکثرکسی نہ کسی کی جان چلی جاتی ہے۔اسی طرح کاایک واقعہ خیبرپختونخوا کے دارالحکومت پشاورکے مضافاتی علاقے شیخ محمدی میں8نومبرکی صبح کوپیش آیاتھاجس میں نامعلوم افرادنے جماعتِ احمدیہ سے تعلق رکھنے والے تقریباً 75سالہ شخص محبوب احمدکوفائرنگ کرکے قتل کردیاتھا۔


یادرہے گزشتہ ماہ پشاورمیں احمدی پروفیسرڈاکٹر نعیم الدین خٹک کا قتل کیا گیاتھاجبکہ اگست میں 61 سالہ احمدی شہری معراج احمدکوبھی پشاورمیں ہی قتل کیا گیا تھا۔

شیئر کریں



یہ بھی پڑھیے


نوجوان کی فائرنگ،ڈاکٹرجاں بحق،3افرادشدیدزخمی