امریکی ایوان نمائندگان پر دھاوے کاذمہ دار ٹرمپ ہے: جوبائیڈن

1 week ago


جو کچھ ہوا وہ بغاوت کے ضمرے میں آتا ہے

امریکاکے منتخب صدر جوبائیڈن نے امریکی ایوان نمائندگان پر دھاوا بولنے والے مظاہرین سے تحمل کا مظاہرہ کرنے کی اپیل کرتے ہوئے صدر ڈونلڈ ٹرمپ کو بغاوت کا مرتکب قراردے دیا۔

نیوزایجنسی اے پی کے مطابق سینیٹ کی جانب سے ممکنہ طور پر توثیق کے بعدجو بائیڈن نے تقریر کا ارادہ کیا تھا جس میں معیشت کی بحالی اور کورونا سے متاثرہ چھوٹے کاروباروں کو مالی ریلیف فراہم کرنے سے متعلق بات کرناتھا۔

ان کے کچھ بولنے سے قبل ہی مظاہرین کیپٹل ہل کی عمارت میں گھس کر سینیٹ کی منزل تک پہنچ گئے۔

بائیڈن نے کہا جدید جمہوری دور میں ہمیں ایسی چیز دیکھنے کو نہیں ملی اور ہماری جمہوریت کو ایک بے مثال حملے کا سامنا ہے اور افراتفری اور یہ پرتشدد واقعات قانون کی حکمرانی پر حملہ ہیں۔

امریکا کے منتخب صدر نے پرتشدد ہجوم سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ پیچھے ہٹیں اور جمہوریت کو آگے بڑھنے دیں۔

بائیڈن نے موجودہ صورتحال پرغم و غصے کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ یہ ہرگز مہذب رویہ نہیں بلکہ افراتفری ہے۔

بائیڈن نے ٹرمپ پر غداری کا الزام تو عائد نہیں کیا لیکن کہا کہ جو کچھ ہوا وہ بغاوت کے زمرے میں آتا ہے۔

تازہ اطلاعات کے مطابق 4لوگ ہلاک ہوچکے ہیں جبکہ اس دوران 52کوحراست میں لے لیاگیاہے۔

واشنگٹن کے میئرنے15دن کے لئے ایمرجنسی نافذکردی ہے۔

پولیس کے  مطابق علاقے کوکلیئرکرنے کے دوران2بم برآمدہوئے ہیں۔

یادرہےامریکی دارالحکومت واشنگٹن ڈی سی میں صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے حامیوں نے امریکی صدارتی انتخابات کے نتائج میں تبدیلی اور منتخب صدر جو بائیڈن کی جگہ ڈونلڈ ٹرمپ کو برقرار رکھنے کی کوشش میں کیپیٹل ہل کی عمارت پر دھاوا بول دیاتھا۔

شیئر کریں



یہ بھی پڑھیے


امریکی ایوان نمائندگان پر دھاوے کاذمہ دار ٹرمپ ہے: جوبائیڈن